Site icon ISLAM KI DUNYA

ہم کو اپنی طلب سے سوا چایئے

ہم کو اپنی طلب سے سوا چایئے

اَللّٰھُمَّ صَلِّ عَلٰی مُحَمَّدٍ وَّعَلٰٓی اٰلِ مُحَمَّدٍ کَمَا صَلَّیْتَ عَلٰٓی اِبْرَاھِیْمَ وَعَلٰٓی اٰلِ اِبْرَاھِیْمَ اِنَّکَ حَمِیْدٌ مَّجِیْدٌ

اَللّٰھُمَّ بَارِکْ عَلٰی مُحَمَّدٍ وَّعَلٰٓی اٰلِ مُحَمَّدٍ کَمَا بَارَکْتَ عَلٰٓی اِبْرَاھِیْمَ وَعَلٰٓی اٰلِ اِبْرَاھِیْمَ اِنَّکَ حَمِیْدٌ مَّجِیْدٌ

اُرْدُو نعت لیرکس – ہم کو اپنی طلب سے سوا چایئے

 

ہم کو اپنی طلب سے سوا چایئے

آپ جیسے ہیں ویسی عطا چایئے

 

کیوں کہیں یہ عطا وہ عطا چایئے

آپ کو علم ہے ہم کو کیا چایئے

 

اک قدم بھی نہ ہم چل سکیں گے حضور

ہر قدم پہ کرم آپ کا چایئے

 

آستانِ حبیب خدا چایئے

اور کیا ہم کو اس کے سوا چایئے

 

آپ اپنی غلامی کی دے دیں سند

بس یہی عزت و مرتبہ چایئے

 

زمین و زماں تمہارے لئے ، مکین و مکاں تمہارے لیے

پھر کے گلی گلی تباہ ٹھوکریں سب کی کھائے کیوں

چلو دیارِ نبیﷺ کی جانب درود لب پر سجا سجا کر

بھر دو جھولی میری یا محمد  لوٹ کر میں نہ جاوّں گا خالی 

Comments
Exit mobile version